Advertisement

Esomeprazole in Urdu. ایسومیپرازول کیا ہے اور کیسے کام کرتی ہے؟


Esomeprazole

پاکستان میں ایسومیپرازول کے مندرجہ ذیل برانڈ دستیاب ہیں:

ACFIRE, ACIDOF, ACILOC, ACIREG, ACIFRE-D, ACTIF, ALBOMEP, ANVITOFF, ARTEK, ARYSA, AWA-BLOCK, AXID NEO, BENPROL, BIOPRAZOLE, CARAMEP, CONTOUR, DIGESSO, E-CAP, ECOROX, EFROZOLE, EGER, EMAGE, EMESS, E-MEPRA, EMPEL, EPIM, EPRAZID, EMPRAZOLE, EPI, EPRAZIN, E-PRAZOLE, E-SAL, ES-AMAZOLE, ESAPROL, ESOBIN, ESOCOOL, ESOFIX, ES-CARE, ES-CAY, ESGRED, ESIM, ESKEM, ES-LOPROT, ESMA, ESMITEC, ESMOL, ES-MYZOLE, ESNIL, ESOCAP, ESOCARE, ESOCUE, ESODAY, ESODIN, ESOFAST, ESOFINE, ESOGENT, ESOGOOD, ESOLD, ESOLEY, ESOMALT, ESOPAN, ESOMAP, ESOMEP, ESOMARK, ESOMAX, ESOMEP, ESONEB, ESONEN, ESONIL, ESONIME, ESONOM, ESONON, ESONORM, ESONEXT, ESOPASE, ESOPHAG, ESOFIL, ESO-P, ESOPEP, ESOPRAL, ESOPRIME, ESOPRASEL, ESOPRAZOL, ESOPROTO, ESOPULSE, ESOR, ESOROK, ESORID, ESSOM, ESOSER, ESSOZAT, ESOTONE, ESOX, ESOZEB, ESOZIL, ESOZINTA, ESPRA, ESPRAZOLE, ESPROL, ESRO, ESOLD, ESOMED, ESOMEGA, ESOSCOT, ESOSON, ESSO, ESOT, ESOTAB, ESOTONE, ESOWIN, ESOYAN, ESSET, ESSOCAM, ESSOGENE, ESSOFAS, ESORANT, ESTEEM, ESTRO, ES-UMRAZOLE, ESVIN, ESVELL, ESZOLE, EUPAZOLE, EXZIUM, E-Z, EZIPEP, EZIUM, EZOMOL, E-ZOLE, EZUMAC, EZTOMAC, EZZO, ESOMEPRAZOLE USES, FASTESO, F-ESO, FERZOLE, GASTIZOL, GASTROZOLE, GERDPILL, GOCID, GUTSY, H2 LOCK, HEALSO, HEMSO, KLOFIX ES, INDAZOLE, INTEZOLE, JITS, KONCEPT, LOMAC, LOZIX, MAP-SAP, MAXPRO, MAXZOLE, MEDIRIUM, MELDERE, MEPREX, MEPRIUM, NAPZOL, NAVIX, NEX-ESO, NEXOM, NEXPRAZOLE, NEXPRIME, NEXUM, NEXUM CAPSULE USES, NOVOTEPH, NYLOZ, OBESO, OBPRA, OMEGAST, OMEPLUS, OPA, OPTIREL, OTTOZOLE, OXILANT, PEPKAP, PEP-EEZ, PEPNOR, PEPSO, PRABEST, PROTOHIB, PROTX, PURPAL, RAYPRAZOLE, RASCOPRO, REGULAX, RELAXUL, REXIUM, RIGA, ROSPEC, SABIZOLE, SANTE, SAPHIRE, SCORE, SHAEZ, SIMESO, S-MEPRA, SOGO, S-OM, SOMELINZ, SOMEPRA, SOMEZOL, SOMICID, SOMPRA, SOMPRAZ, SOMRIT, SOSO, TRUTIL, T-XIUM, UL-SOME, ULTECH, UTIL, VOGUE, WESOPRAZOL, XOCREL, X-PRAZOLE, XUMISOL, ZESPRA, ZEXUM, ZIMES, ZOLERIC, ZOOM, ZUMIN.

ایسومیپرازول (Esomeprazole) کا شمار ادویات کے گروپ Proton Pump Inhibitors میں ہوتا ہے۔ ہمارے معدہ میں موجود Parietal Cells کی خُلوی جِھلی میں Proton Pumps پائے جاتے ہیں جِن کا کام معدہ میں تیزاب پیدا کرنا ہوتا ہے۔ ایسومیپرازول انہی Proton Pumps پر اثرانداز ہو کر اِن کی تیزابیت بڑھانے کی صلاحیت کو کم کر دیتی ہے، جس سے معدہ میں تیزابیت کم ہو جاتی ہے۔



Esomeprazole uses in Urdu

ایسی طِبی کیفیات جس میں تکلیف کی وجہ معدہ کی بڑھی ہوئ تیزابیت ہو، اُن میں ایسومیپرازول کا اِستعمال رائج ہے۔ اِن کیفیات میں سے چند یہ ہیں:

  1. غذائ نالی میں زخم کی وجہ سے ہونے والی سوزش (Erosive Esophagitis) کے علاج کیلیئے

  2. معدہ میں موجود بیکٹیریا H.Pyloriکے علاج کیلیئے

  3. Gastroesophageal Reflux Disease

منہ کے ذریعے جسم میں داخل ہونے کے بعد ایسومیپرازول (Esomeprazole) کی تقریباً 90 فیصد مِقدار جَذب ہوتی ہے جس کےبعد یہ جگر میں ٹوٹ پھوٹ کا شِکار ہوتی ہے۔ کھائ جانے والی ایسومیپرازول کا تقریباً 80 فیصد حصہ پیشاب کی ذریعے جسم سے خارج ہوتا ہے، جبکہ تقریباً 20 فیصد حصہ پاخانہ کے ذریعے جسم سے خارج ہوتا ہے۔ تقریباً ڈیڑھ گھنٹے کے بعد کھائ جانے والی ایسومیپرازول کی آدھی مقدار جسم سے خارج ہو چُکی ہوتی ہے۔

ایسومیپرازول (Esomeprazole side effects) کے استعمال سے مندرجہ ذیل سائیڈ افیکٹ سامنے آ سکتے ہیں:

۔ سر درد

۔ چکر آنا

۔ پیچش

۔ مُنہ کا ذائقہ خراب ہونا

۔ پیٹ درد

۔ ریاح

۔ ورم معدہ

۔ قبض

۔ مُنہ خُشک ہونا

۔ جِلد پر خارش

۔ کھانسی

۔ سانس تیز چلنا (بچوں میں)

۔ بُلند فِشارِ خون

۔ کمر درد

حاملہ خواتین میں ایسومیپرازول (Esomeprazole) کے اِستعمال سے متعلق تحقیق فِی الحال محدود ہے (Pregnancy Category B)۔ اس لیئے اِن خواتین میں اس کا استعمال صرف اشد ضرورت کے تحت کیا جانا چاہیئے۔ چونکہ ایسومیپرازول کی کُچھ مقدار ماں کے دودھ میں خارج ہوتی ہے، اِس لیئے اِس دوا کا استعمال دودھ پلانے والی ماؤں میں احتیاط سے کرنا چاہیئے۔



حالیہ تحقیق کے مطابق ایسومیپرازول (Esomeprazole)کے استعمال سے خون میں میگنیشیم (Magnesium) کی سطح کم ہو سکتی ہے۔ اِس سے مندرجہ ذیل مسائل پیدا ہو سکتے ہیں:

۔ قلب کی حرکت بے ترتیب ہونا

۔ اعصاب کے مسائل (مثلاً دورے پڑنا)

۔ پٹھے اکڑنا یا پٹھوں میں کمزوری محسوس ہونا

۔ Osteomalacia

۔ Osteoporosis

۔ خون میں کیلشیم کی سطح کم ہونا

۔ سر چکرانا

۔ کھانسی ہونا یا گلا گُھٹتا ہوا محسوس ہونا

۔ خون میں پوٹاشیم کی سطح کم ہونا

۔ پیچش

ایسی کیفیت ہو تو اپنے معالج سے رجوع کریں۔ مزید یہ کہ جو لوگ لمبے عرصے سے ایسومیپرازول کا استعمال کر رہے ہوں، ان کو احتیاطاً Serum Magnesium Levels کا ٹیسٹ وقفہ وقفہ سے کرواتے رھنا چاہیئے۔


Skype

Clicking Subscribe button will subscribe you to our marketing campaigns as well.